بندہ قادر کا بھی قادر بھی ہے عبدالقادر

بندہ قادر کا بھی قادر بھی ہے عبدالقادر بندہ قادر کا بھی قادر بھی ہے عبدالقادر سرِّ باطن بھی ہے ظاہر بھی ہے عبدالقادر مفتیِ شرع بھی ہے قاضیِ ملّت بھی ہے علمِ اَسرار سے ماہر بھی ہے عبدالقادر منبعِ فیض بھی ہے مجمعِ افضال بھی ہے مہرِ عرفاں کا منور بھی ہے عبدالقادر قطبِ …

بندہ قادر کا بھی قادر بھی ہے عبدالقادر Read More »