Martaba Abbas As Ka Lyrics

 

Aasman waloñ se poochho martaba Abbas ka
Naam lete hain adab se anbiya Abbas ka.

Martaba Abbas Ka Lyrics

Aasman waloñ se poochho martaba Abbas ka

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا
نام لیتے ہیں ادب سے انبیاء عباس کا

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا

 

Koi patta hil nahi sakta ijazat ke baghair
Sari duniya hai khuda ki aur khuda Abbas ka.

Aasman waloñ se poochho martaba Abbas ka

کوئی پتہ ہل نہیں سکتا اجازت کے بغیر
ساری دنیا ہے خدا کی اور خدا عباس کا

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا

 

Hubahu Abbas the sher e khuda ka aayina
Ban saka lekin na koi aayina Abbas ka.

Aasman waloñ se poochho martaba Abbas ka

ہوبہو عباس تھے شیرِ خدا کا آئینہ
بن سکا لیکن نہ کوئی آئینہ عباس کا

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا

 

Maayeñ apne naunihaloñ ko bana deti hain sher
Unko Lori me suna kar waqeya Abbas ka.

Asman waloñ se poochho martaba Abbas ka

مائیں اپنے نونہالوں کو بنا دیتی ہیں شیر
ان کو لوری میں سنا کر واقعہ عباس

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا

 

Hurmala be sheer se nazreñ milata kis tarah
Aankh Asghar ki thi lekin rob tha Abbas ka.

Asman waloñ se poochho martaba Abbas ka

حرملا بے شیر سے نظریں ملا تا کس طرح
آنکھ اصغر کی تھی لیکن روب تھا عباس کا

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا

 

Bewafa padh hi nahi sakta kitab e Karbala
Har waraq par aaj bhi hai haashiya Abbas ka.

Aasman waloñ se poochho martaba Abbas ka

بے وفا پڑھ ہی نہیں سکتا کتابِ کربلا
ہر ورق پر آج بھی ہے حاشیہ عباس کا

آسماں والوں سے پوچھو مرتبہ عباس کا

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *

This site uses Akismet to reduce spam. Learn how your comment data is processed.